اپنے براؤزر کی یہ سیٹنگ فوری ٹرن آف کردیں

Print Friendly, PDF & Email

اگر آپ انٹرنیٹ پر سرچ یا گوگل اور فیس بک اکاؤنٹس وغیرہ پر سائن اِن کرنے لگتے ہیں تو یقیناًآٹو کمپلیٹ کے فیچر سے ضرور واقف ہوں گے۔ویسے تو یہ خاصا کارآمد فیچر ہے جو کہ ہر بار لاگ اِن ہونے کے دوران آپ کو آئی ڈی اور پاس ورڈ لکھنے سے بچاتا ہے، مگر بدقسمتی سے کچھ ہیکرز اسے لوگوں میں زیادہ مقبول براؤزرز میں اپنے فائدے کے لیے استعمال کرنے لگے ہیں۔ جی ہاں واقعی آٹو کمپلیٹ کے ذریعے ہیکرز آپ کی ذاتی معلومات مثلاً کریڈٹ کارڈ نمبر اور آن لائن اکاؤنٹس کے پاس ورڈز وغیرہ چرا سکتے ہیں اور آپ کو اس کا علم بھی نہیں ہوگا۔ درحقیقت ہیکرز خفیہ ٹیکسٹ باکس ان ویب سائٹس کے آٹو کمپلیٹ میں چھپا دیتے ہیں جہاں آپ اپنی آئی ڈی، پاس ورڈ اور کریڈٹ کارڈ نمبر درج کرتے ہیں۔ مگر اچھی بات یہ ہے کہ اس سے تحفظ بہت آسان ہے۔ یہ بات فن لینڈ سے تعلق رکھنے والے ڈویلپر سامنے لائے تھے جنھیں احساس ہوا کہ اس کے ذریعے ہیکر لوگوں کو ہدف بنا سکتے ہیں۔ ہیکرز اس کے ذریعے گوگل کروم، سفاری اور اوپیرا کے صارفین کو نشانہ بنا سکتے ہیں، جبکہ پاس ورڈ منیجر کا کام کرنے والی ایکسٹیشنز بھی ان کا ہدف بن جاتی ہیں۔ تو اگر آپ ان براؤزرز میں سے کسی کو استعمال کررہے ہیں تو بہتر ہے کہ براؤزر سیٹنگز میں جاکر آٹو فل ان ایبل کے چیک کو ہٹا دیں، جبکہ ویب پاس ورڈ محفوظ کرنے والے سیکشن کو بھی ان چیک کردیں۔

Share this: