Friday magazine

امان اللہ شادیزئی

43 مراسلات 0 تبصرے

ایرانی نائب وزیرخارجہ کا قونصل خانے میں تقریب سے خطاب

ایران میں اسلامی انقلاب کے بعد ایرانی سفارت خانے اور ثقافتی مرکز بہت زیادہ متحرک نظر آتے ہیں۔ شاہ کے دور میں اس کی...

سوویت یونین نے بھٹو کی پالیسی کی حمایت کردی؟۔

روزنامہ جسارت شہرت کی بلندیوں پر جیل میں وقت آہستہ آہستہ گزر رہا تھا، قید طویل ہوتی چلی جارہی تھی اور رہائی کی اُمید کی کرن...

نیب بھٹو کشمکش اور بلوچستان

حکومت نے مقدمۂ بغاوت تو قائم کردیا تھا لیکن ابھی تک اس کا عدالتی آغاز نہیں ہوا تھا۔ ریمانڈ کے لیے مجسٹریٹ کے سامنے...

جیل نے نیپ کے تضادات کھول دیئے

بلوچستان میں بھٹو اور نیپ میں کشمکش تیز ہوتی جارہی تھی، گرفتاریاں بھی اسی حساب سے ہورہی تھیں اور پہاڑوں پر مسلح تصادم بھی...

شہنشاہ ظہیرالدین بابر کا ہندوستان کے بارے میں دلچسپ تبصرہ

شہنشاہ بابر 6 محرم 888ھ، مطابق 1483ء کو پیدا ہوا، اور اس کی وفات 1530ء میں ہوئی۔ 11 سال کی عمر میں باپ کی...

حیرت سے دیکھتا ہی رہ گیا جب سالار نے قتل کرنے...

گزشتہ سے پیوستہ جیل کے دن تو خوش گوار ہوسکتے ہیں لیکن راتیں دلکش نہیں ہوتیں۔ گزرے ہوئے لمحات یاد آتے ہیں اور ذہن اکثر...

پشین کلاشنکوفوں کی فائرنگ سے گونج رہا تھا

(گزشتہ سے پیوستہ) جون کے بعد جولائی کا مہینہ بھی گزر رہا تھا اور ابھی تک میرے احاطے میں کوئی بھی سیاسی قیدی نہیں آیا...

پھانسی گھاٹ پر حیرت انگیز منظر نگاہوں کے سامنے تھا

میری قید بھی مختلف مرحلوںسے گزر رہی تھی۔ جب کوئی نیا سیاسی قیدی آتا تو تنہائی کم ہوجاتی، اور جب کوئی غمگسار نہ ہوتا...

اسلحہ کے تاجر غلام محمد ڈوسل کی کہانی

گزشتہ سےپیوستہ اب نئے قیدی کی وجہ سے میری قیدِ تنہائی ختم ہوگئی۔ میرے احاطے کا نیا قیدی کوئی عام آدمی نہ تھا، بلکہ پاکستان...

دوست محمد “دی تاجار سم؟”

آج اسکول کے زمانے کی کچھ یادیں قلم بند کرنا چاہتا ہوں۔ یہ دور بھی ایک خوبصورت خواب کی مانند ہے۔ اب تو گزرے...
پرنٹ ورژن
Friday magazine