اطہرعلی ہاشمی

46 مراسلات 0 تبصرے

’’نہ ہی‘‘ کا استعمال

ابوالاثر حفیظ جالندھری کو کسی نے یہ شعر سنایا: دیکھا جو تیر کھا کے کمین گاہ کی طرف اپنے ہی دوستوں سے ملاقات ہو گئی حفیظ صاحب...

’قاموس الفصاحت‘ اور ماہر القادری

حضرتِ ماہرالقادری (مرحوم) بجائے خود ایک لغت تھے، لیکن اردو کی کوئی لغت ایسی نہیں جو غلطیوں سے پاک ہو۔ یہ غلطیاں عموماً کتابت...

’’پھوٹی پڑی روشنی‘‘

ہم تو اپنی کوشش میں لگے ہوئے ہیں لیکن بڑے بڑے علما، فضلا، ٹی وی چینلز اور اہلِ قلم بالٹیاں لیے کھڑے ہیں اور...

خبر لیجے چلن بگڑا

فرائیڈے اسپیشل کے تازہ شمارے (22 تا 28 جون) میں پروفیسر آسی ضیائی مرحوم کی کتاب ’’درست اردو‘‘ پر ملک نواز احمد اعوان کا...

تار۔ مذکر یا مونث؟

اردو میں ہم ایسے کئی الفاظ بے مُحابا استعمال کرتے ہیں جن کا مفہوم اور محل واضح ہوتا ہے لیکن کم لوگ جن میں...

املا درست کرنے کا قابلِ تعریف سلسلہ

اطہر ہاشمی منجملہ اُن کے ایک یہ ہے کہ مصدر یعنی verbal noun کے الف پر ہمیشہ زیر ہوتا ہے۔ اس میں کبھی کوئی تبدیلی...

’’لیجے‘‘ یا’’ لیجیے‘‘؟

اس بار بیرونی ممالک سے کچھ طویل مراسلات ملے ہیں جن سے نہ صرف ہماری معلومات میں اضافہ ہوا بلکہ کام آسان ہوگیا۔ پہلے...

فاجعہ اور فاجۂ

عربی کا لفظ ہے اور الف کے نیچے زیر ہے۔ یہ روزے کی ضد ہے۔ تاہم ہمارے کئی ساتھی اب بھی الف پر زبر...

بجائے خود یا بذات خود

ہم ایک عرصے سے اس الجھن میں ہیں کہ بذات خود اور بجائے خود میں کیا فرق ہے اور ان کا محل استعمال کیا...

بانگِ درا کی نئی تشریح

پچھلے شمارے میں ’اسم قاعل‘ اسم فائل ہوگیا۔ چلیے، وہ جو سرکاری دفاتر میں فائل چلتے ہیں ان پر بھی کوئی نہ کوئی نام...
پرنٹ ورژن
Friday magazine