حضرت عمرؒ بن عبدالعزیز کو ایک نصیحت

Print Friendly, PDF & Email

حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ نے حضرت عمرؓ کے پوتے سالم بن عبداللہؒ کو لکھا کہ میرے پاس حضرت عمر ؓبن خطاب کے کچھ خطوط بھیج دو۔ حضرت سالم بن عبداللہؒ نے جواب میں لکھا:
’’اے عمر! اُن بادشاہوں کو یاد کرو جن کی لذت اندوزیاں کبھی ختم نہیں ہوتی تھیں، آج اُن کی آنکھیں پھوٹ چکیں، جن کے پیٹ کبھی سیر نہیں ہوتے تھے آج وہ پیٹ پچک گئے، آج وہ زمین کی آغوش میں ایسے مُردار بن چکے ہیں کہ کوئی ادنیٰ فقیر بھی ان کے پاس بیٹھ جائے تو بدبو سے بے چین ہوجائے‘‘۔
(ابونعیم الاصفہانیؒ: حلیتہ الاولیا، ص194، ج27) (مفتی محمد تقی عثمانی۔ ”تراشے “)

Share this: